سام سنگ نے چھ کیمروں والے فولڈ ہونے والے سمارٹ فون کو متعارف کرا دیا

سام سنگ نے فولڈ ہونے والے سمارٹ فون دا گلیکیسی فولڈ، کی رونمائی کی ہے۔

گیلیکسی ایس 10 فائیو جی اور تین گیلیکسی ایس 10 موبائلز کی رونمائی کی ہے۔

گیلیکسی فولڈ دو ماہ کے اندر ہی مارکیٹ میں فروخت کے لیے دستیاب ہو گا جو توقع سے بہت پہلے ہے۔

سام سنگ کا کہنا ہے کہ گیلیکسی فولڈ سات اعشاریہ تین انچ یعنی 18 اعشاریہ پانچ سینٹی میٹر تک ٹیبلٹ کی مانند کھل سکے گا اور اس میں ایک وقت میں تین ایپس کو کھولا جا سکے گا۔

اس کا عملی مظاہرہ کر کے دکھایا گیا کہ کیسے تینوں ایپس ایک ساتھ چلتی ہیں اور اس میں ڈیوائس ایک موڈ سے دوسرے موڈ میں اس سے قبل آنے والے فولڈنگ موبائل فلیکس پائی سے زیادہ بہتر انداز میں ہوتی ہے۔

اس کی ایک مثال گوگل میپس کی ہے جو کہ فون کے چھوٹے حصے پر دکھائی دیتا ہے تو اسے کھولتے ہی ایک سیکنڈ میں اسے بڑا کر کے دکھا دیتا ہے۔

اس نئے فون میں واٹس ایپ، فیس بک اور یو ٹیوب کو موبائل کی نئی شکل کے مطابق ڈھالا جا سکے گا۔

سام سانگ کا کہنا ہے کہ فون میں چھ کیمرے ہیں تین پیچھے، دو اندر اور ایک باہر تاکہ اس بات کو یقینی بنایا جائے کہ اگر فون ایک طرف سے بند ہو جائے تو بھی تصویر لی جا سکے۔

گیلیکسی فولڈ کا فور جی ورژن 26 اپریل کو فروخت کے لیے سامنے آئے گا اس کی قیمت ایک ہزار نو سو اسّی ڈالر سے شروع ہوتی ہے۔ اس سے مہنگا فائیو جی ایڈیشن ہو گا۔ سام سنگ نے اسے لگژری آئیٹم کہا ہے۔

کیرولینا میلینسی کا تعلق کنسلٹینسی کرئیٹو سٹریٹیجیز سے ہے۔ وہ کہتی ہیں کہ فولڈ ان لوگوں کے لیے ایک تجربہ ہو گا جو فون تو چاہتے ہیں لیکن بڑی سکرین والا۔ وہ کہتی ہیں کہ یہ ٹیکنالوجی سے لیس ہے۔ اور یہی اس کی قیمت دو ہزار ڈالر تک ہونے کی وجہ ہے۔

لیکن مارکیٹ پر نظر رکھنے والے کچھ لوگوں کو ابھی بھی اس پر شکوک و شبہات ہیں۔

اور اس تھیوری کو ماننے والوں میں شامل نیل ماؤسٹن بھی شامل ہیں ان کا تعلق فرم سٹیرٹیجی انیلیٹکس سے ہے۔ وہ کہتے ہیں کہ فولڈ ہونے والا موبائل بہت پرکشش ہے۔ انھوں نے ایک بڑی سکرین کو ایک چھوٹے سے ڈیزائن میں سمویا ہے لیکن صارف یہ نہیں جانتے کہ یہ کام کیسے کرے گا اور اس کی اپلیکیشنز ابھی میچور نہیں دکھائی دیتی ہیں۔

ماضی میں بھی دوہری سکرین والے زیڈ ٹی ای اور این ای سی موبائلز بھی بہت زیادہ نہیں بک سکے تھے وجہ ان کی قیمت اور ڈسٹریبیوشن کی کمی تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں