کرکٹ: پاکستان اور بھارت کی ٹیمیں زبردست ٹاکرے کے لیے تیار

پاکستان کرکٹ ٹیم کے چیف سلیکٹر انضمام الحق نے کہا ہے کہ پاکستان کرکٹ ٹیم کا بھارتی کرکٹ ٹیم کے ساتھ کہیں بھی مقابلہ ہو زبردست ہوتا ہے. کل بھی پاکستان اور بھارت کے درمیان زبردست مقابلہ دیکھنے کو ملےگا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ویرات کوہلی کے نہ ہونے سے پاکستان کو نہیں البتہ بھارت کو فرق پڑے گا۔ ضرورت اس بات کی ہے کہ پاکستان کو اپنی حکمت عملی کے سا تھ کھیلنا چاہیے۔

پاک بھارت میچ کے حوالے سےقومی کرکٹ ٹیم کے سابق فاسٹ باؤلر شعیب اختر نے کہا ہے کہ متحدہ عرب امارات کی طرف سے لگائی گئی کنڈیشنز کا پاکستان کو فائدہ ہو گا۔ بھارتی ٹیم پر چیمپئینز ٹرافی کے فائنل کی شکست کا خو ف ہو گا اس لیے پاکستان کرکٹ ٹیم کو نفسیاتی برتری حاصل ہے۔

سوئنگ کے سلطان وسیم اکرم نے تبصرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان میچز کی ٹینشن گراونڈ میں ضرور ہوتی ہے لیکن کھیل کے میدان کے باہر سب دوست ہوتے ہیں اور ساتھ کھانا بھی کھاتے ہیں۔ پاکستان اور بھارت کے کھلاڑی میدان میں آخری گیند تک لڑتے ہیں۔

لاہور قلندرز کے ڈائریکٹر اور سابق فاسٹ باؤلر عاقب جاوید نے کہا ہے کہ پاک کرکٹ ٹیم کا مائنڈ سیٹ بہت تبدیل ہو چکا ہے۔ اب پاکستانی کھلاڑیوں کے کھیلنے کا انداز ٹک ٹک والا نہیں ہے۔ ہمارے کھلاڑی نوے کی دہائی کی طرح جارحانہ انداز میں کھیل رہے ہیں. انہوں نےمزید کہا کہ مجھے اس میں کوئی شک نہیں ہے کہ پاکستان کی کرکٹ ٹیم بھارت کو ہرادے گی۔

میچ کے بارے میں لیگ اسپنر یاسر شاہنے کہا ہے کہ پاک بھارت میچز بہت کم ہو تے ہیں اس لیے انہیں میچ کا بہت شدت سےانتظار ہے اور ان کی نیک خواہشات پاکستان ٹیم کے ساتھ ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں