Home / خبریں / کوئی غیر آئینی اقدام نہیں اٹھایا جائے گا، توسیع کے فیصلے پر قائم
army chief extension case

کوئی غیر آئینی اقدام نہیں اٹھایا جائے گا، توسیع کے فیصلے پر قائم

اسلام آباد (قلمدان – 27 نومبر 2019 – شہریار) وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت ہونے والے کابینہ کے ہنگامی اجلاس میں یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ کوئی غیر قانونی اور غیر آئینی قدم نہیں اٹھایا جائے گا۔ تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت ہونے والا اہم ترین اجلاس ختم ہوگیا ہے جس میں آرمی چیف نے بھی شرکت کی۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ کوئی غیر قانونی اور غیر آئینی قدم نہیں اٹھائیں گے۔ تاہم حکومت جنرل قمر جاوید باجوہ کی توسیع کے فیصلے پر قائم ہے۔

اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان نے واضح کیا کہ حکومت اور عدلیہ میں تصادم کا تاثر نہ دیا جائے، اور نہ ہم ایسا سوچ سکتے ہیں ۔ آرمی چیف کی توسیع کے کیس کے حوالے سے وزیر اعظم نے لیگل ٹیم کو ہدایات جاری کردی ہیں ، انہوں نے لیگل ٹیم سے کہا ہے کہ جہاں بھی ضرورت پڑے قانونی رہنمائی لی جائے۔ وزیر اعظم نے فروغ نسیم اور اٹارنی جنرل انور منصور خان کو مکمل تیاری کے ساتھ سپریم کورٹ میں پیش ہونے کی ہدایت بھی کردی۔

واضح رہے کہ وزیر اعظم آفس میں جاری اہم ترین اجلاس میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ، حکومت کی قانونی ٹیم، سینئر وفاقی وزرا، پی ٹی آئی رہنما اور دیگر شریک تھے۔ اجلاس میں آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع کے حوالے سے جاری کیس کے حوالے سے مشاورت کی گئی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے