گورنمنٹ گرلز پائلٹ ہائر سیکنڈری سکول میں بدقماش اہلکاروں کی موجودگی

ساہیوال سے ملک دلاور سلطان ڈھکو
گورنمنٹ گرلز پائلٹ ہائر سیکنڈری سکول میں بدقماش اہلکاروں کی موجودگی، سکول سے لڑکیاں بھگانے والے ایک بارپھرمتحرک، پرنسپل کرپٹ عناصرکوتحفظ فراہم کرنے لگی، نوجوان بچیاں عدم تحفظ کا شکار، والدین کی نیندیں اچاٹ

تفصیلات کے مطابق شہرکے وسط میں واقع ایک قدیمی درسگاہ گورنمنٹ گرلزماڈل پائلٹ ہائرسیکنڈری سکول میں بدقماش تعلیمی اہلکاروں کی موجودگی کی اطلاعات پر والدین میں تشویش کی لہردوڑگئی، نوجوان بچیاں عدم تحفظ کا شکارہونے لگیں، ذرائع کے مطابق محکمہ سکول ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ میں موجود بعض بدقماش عناصرنے گورنمنٹ گرلزپائلٹ سکول میں پنجے گاڑرکھے ہیں، بچیوں کی ناموس کے دشمن یہ عناصرقبل ازیں (ش)اور(ک)نامی دوبچیوں کوسکول سے بھگانے میں کامیاب ہوچکے ہیں جنہیں مقامی پولیس نے جان توڑکوششوں سے لاہورسے برآمد کیاتھا،

پائلٹ سکول کے عملہ کے ایک باخبرفردنے اعلیٰ حکام کودی گئی درخواست میں سکول میں تعینات مردسٹاف اورپرنسپل شگفتہ پروین پرسنگین نوعیت کے الزامات عایدکئے تھے جن میں مالی کرپشن کے علاوہ جنسی ہراسمنٹ اورسکول کی طالبات کو غلط راستے پرچلانے کی ترغیب جیسے ہولناک انکشافات بھی شامل تھے،

انکوائری افسر عالم جعفری نے طویل انکوائری کے بعد پرنسپل میڈم شگفتہ پروین سمیت ایڈمنسٹریشن کونااہل اقراردیتے ہوئے طالبات اورخاتون ٹیچنگ سٹاف کو بلیک اورہراس کرنے کے الزامات میں نائب قاصدسلیم،جونیئرکلرک سلیم طاہراورلائبریرین لطف اللہ عابد کو زنانہ تعلیمی اداروں سے نکالنے کی سفارش کی تھی۔

محکمہ سکول ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ کے حکام نے انکوائری افسرکی سفارشات کو یکسرنظراندازکرتے ہوئے غیراخلاقی سرگرمیوں میں ملوث مافیاکوتاحال زنانہ تعلیمی ادارے میں برقراررکھاہواہے، سکول پرنسپل میڈم شگفتہ پروین نے نوجوان سکول طالبات کے عدم تحفظ اوروالدین کی بے چینی کو بے بنیاد قراردیتے ہوئے سکول عملہ کی تعریف کی ہے۔عوامی سماجی حلقوں نے ڈپٹی کمشنر میاں محمدزمان وٹواورکمشنر عارف انوربلوچ سے اصلاح احوال کا مطالبہ کیا ہے ۔
sahiwal news

اپنا تبصرہ بھیجیں