urdu kahani

کہانی: اقامتی درسگاہ

تحریر : کاشف سلیم ماں مجھے نہیں رہنا یہاں! مجھے ساتھ لے جاؤ، میں یہاں نہیں رہ سکتا، ماں مت جاؤ! ماں مت جاؤ! سکول گیٹ پر پانچ سالہ احمد اپنی ماں سے لپٹارو رہا تھا۔ ماں نے نم آنکھوں مزید پڑھیں

Urdu Afsanay

عنوان : قومی کھیل

پچاس لفظوں کی ایک کہانی عنوان : قومی کھیل مصنف : محسن یعقوب ……………………………………………………………….. مختلف ممالک کے پسندیدہ کھیل ملاحظہ فرمائیں… افغانستان : بزکشی کینیڈا: آئس ہاکی جاپان: سومو ریسلنگ نیوزی لینڈ: رگبی سپین: بُل فائٹنگ امریکہ: بیس بال سری مزید پڑھیں

URDU KAHANI

افسانہ: میڈم جی

مصنف: جبران علی وہ دوپہر کو ڈیرے پر ایک بوسیدہ چارپائی پر دوسرے گاؤں سے آنے والی سڑک پر نظریں جمائے بیٹھا تھا۔یہ اس کا پچھلے کئی روز سے معمول تھا، وہ دوپہر کو آتا اور ڈیرے پر چارپائی پر مزید پڑھیں

urdu afsanay

تمغہ جرات

جبران علی جب وہ اسٹیج پر اپنے خاوند کا تمغہ جرات وصول کرنے گئی تو میں حال میں اسٹیج کے سامنے بیٹھا، میں سوچ رہا تھا اگر واقعی یہ نہ ہوتی تو جمیل کو یہ تمغہ کبھی نہ ملتا۔ جمیل مزید پڑھیں

افسانہ: امید

مصنف : جبران علی کبھی وہ ماضی کو یاد کرتا اور کبھی مستقبل کے سنہرے خواب بنتا،وہ ہر وقت سوچوں کے دھاگوں میں الجھا رہتا۔ وہ کال کوٹھڑی میں بیٹھا، ماضی کی باتوں کو حافظے کے پردے پر، یادوں کی مزید پڑھیں

Urdu Afsanay

عنوان: اچھے سیاستدان

سو لفظوں کی ایک کہانی مصنف : محسن یعقوب عنوان : اچھے سیاست دان “اچھے سیاست دان کیسے ہوتے ہیں؟ ” میں نے کل آٹھویں جماعت کے بچوں سے دورانِ سبق سوال کیا. “سر وہ جھوٹ نہیں بولتے..” پہلی قطار مزید پڑھیں

URDU AFSANA

نام کا گوتم بدھ

مصنف: جبران علی اس نے مجھے دیکھ کر چھوٹتے ہی کہا ’’یہ کیا تم گوتم بدھ کی طرح ہر وقت چپ چاپ بیٹھے رہتے ہو، شاید تم آدم بیزار ہو‘‘ غصہ اس کے چہرے پر کھنڈرہا تھا اور زبان میں مزید پڑھیں

urdu afsana

افسانہ: شہر خموشاں

جبران علی اس کی روح کو سرشاری قبرستان میں ہی بیٹھ کرہی آتی۔جب بھی دیکھو وہ قبرستان میں بیٹھا نظر آتا۔اس کو قبروں کے بارے میں کوئی خاص پتہ نہیں تھا کہ کون سی قبر کس کی ہے؟ بس یونہی مزید پڑھیں

افسانہ: محاذ

جبران علی “میرے جانباز سپاہیوں فیصلے کی گھڑی آن پہنچی ہے ۔ جیسا کہ تم جانتے ہو ہم ایک طاقتور دشمن کا سامنا کر نے جا رہے ہیں، ہم اپنے وطن، اپنی زمین اوراپنے گھر کے لیے لڑ رہے ہیں۔ مزید پڑھیں

افسانہ : تلاش

جبران علی پندرہ سال کے طویل عرصے کے بعد وہ اپنے گھر لوٹ رہا تھا۔شب و روز ،ماہ و سال گزرتے چلے گئے۔ وہ ایام کے پردوں میں ایسا الجھا کہ اس کو گھر جانے میں بہت دیر لگ گئی۔ مزید پڑھیں